گھر سے باہر وہ نقاب میں نکلی

گھر سے باہر وہ نقاب میں نکلی.
ساری گلی اسکی تلاش میں نکلی.
 
انکار کرتی تھی وہ میری محبت سے.
اور ہماری  ہی تصوير اسکی کتاب سے نکلی.

Click here for download.

Leave a Comment